اظہارِ رائے کی مکمل آزادی کا ترجمان

پاکستانی خاتونِ آہن، مُنیبہ مِزاری 10 سال بعد چلنے کے قابل ہو گئیں

یاد رہے کہ 10 سال قبل ایک کار حادثے کے باعث منیبہ مزاری کی ریڑھ کی ہڈی کو نقصان پہنچا تھا جس کے بعد وہ چلنے پھرنے سے قاصر ہوگئی تھیں

17

پاکستان کی حوصلہ مند معروف مصورہ منیبہ مزاری 10سال بعد اپنی ویل چیئر سے کھڑی ہوگئیں۔

منیبہ روبوٹک ٹانگوں کی مدد سے ایک بار پھر بغیر کسی سہارے کے چلنے کے قابل ہو گئی ہیں۔

10 سال بعد ان کے چلنے کی ویڈیو بھی سوشل میڈیا پر خوب وائرل ہوئی، یہ تصاویر اور ویڈیو منیبہ مزاری نے امریکا کے ایک ہسپتال سے شیئر کیں۔

یاد رہے کہ 10 سال قبل ایک کار حادثے کے باعث منیبہ مزاری کی ریڑھ کی ہڈی کو نقصان پہنچا تھا جس کے بعد وہ چلنے پھرنے سے قاصر ہوگئی تھیں۔

کار حادثے میں معذوری کے باوجود منیبہ کے عزم اور حوصلے میں کمی نہیں آئی اور انہوں نے وہیل چیئر پر بھی مصوری کے کام کو جاری رکھا۔

خیال رہے کہ صنفی مساوات اور خواتین کو خود مختار بنانے کے اقوام متحدہ کے ادارے برائے خواتین (یو این ویمن) نے 2015 میں منیبہ مزاری کو پاکستان کی پہلی خاتون خیر سگالی کی سفیر بھی مقرر کیا۔

کار حادثے میں اپنی دونوں ٹانگوں سے معذور ہونے والی منیبہ مزاری مصنفہ، گلوکارہ اور سماجی کارکن ہیں، جو خواتین کے خلاف صنفی امتیاز کی روک تھام کے لئے سرگرم رہتی ہیں۔

واضح رہے کہ منیبہ مزاری کا نام خواتین کے خلاف صنفی امتیاز کے لیے کام کرنے پر بی بی سی کی ’100 بااثر خواتین‘ کی فہرست میں بھی شامل کیا گیا تھا۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں اور مذکورہ خبر کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.